دہشتگردی کی روک تھام کیلئے کاؤنٹرفائنسنگ اتھارٹی قیام کا بل سینیٹ سے منظور

قومی انسداد منی لانڈرنگ اوردہشت گردی کی روک تھام کیلئے کاؤنٹرفائنسنگ اتھارٹی قیام کابل سینیٹ سے منظور کرلیا گیا۔بل پر سینیٹ میں ووٹنگ ہوئی تو بل کے خلاف 9 اور حق میں 28 ووٹ آئے، رضا ربانی، طاہربزنجو، کامران مرتضیٰ بل منظوری کے حق میں کھڑے نہیں ہوئے، بل فوری منظور کئے جانے کی پی ٹی آئی اور جماعت اسلامی کی طرف سے مخالفت آئی۔
بل پیش کرتے ہوئے حنا ربانی کھر نے کہا کہ بل قومی اسمبلی سے منظور ہو کر آیا ہے، اس بل کے تحت اتھارٹی قائم کی جائے گی، یوسف رضا گیلانی نے کہا کہ یہ اہم بل ہے جو پورے ملک کے لئے اہم ہے۔
اسحاق ڈار نے کہا کہ ہم نے ایف اے ٹی ایف کو اپنا فیوچر پلان دیا۔
پی ٹی آئی سینیٹر محسن عزیز نے کہا کہ 12 بلز ایک دن میں کس طرح پڑھے جا سکتے ہیں، ہمیں ربر سٹامپ نہ بنایا جائے، دنیا ہمارا تمسخر اڑا رہی ہے۔
کاؤنٹرفائنسنگ اتھارٹی قیام کے بل کی منظوری پر اپوزیشن کی جانب سے نعرے بازی اور شدید احتجاج کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں