مقررہ مدت میں پاکستان کی ترقی کی بنیاد رکھنے کی کوشش کریں گے : نگران وزیراعظم

اسلام آباد: نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ نے کہا ہے کہ مقررہ مدت میں پاکستان کی ترقی کی بنیاد رکھنے کی کوشش کریں گے ۔
نگران کابینہ کے پہلے اجلاس سے خطاب میں نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ نے کہا کہ رول آف آرڈر سے ہی قانون کی حکمرانی ہوگی، قائد اعظم اور علامہ اقبال کے وژن پر عمل کر کے پاکستان کی ترقی میں کردار ادا کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان ایک زرعی اور قدرتی وسائل سے مالامال ملک ہے، ملکی اور غیر ملکی سطح پر کیے گئے وعدوں کو پورا کریں گے، مجھے فخر ہے کہ میری ٹیم ایک تجربہ کار اور بہترین ٹیم ہے ، معاشی مسائل کے حل کیلئے بہترین اقدامات کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ یقین ہے اللہ تعالیٰ ہمیں سرخرو کریں گے، تمام وزرا سے امید کرتا ہوں کہ وہ اپنی اپنی وزارتوں میں بھرپور کام کریں گے۔

نگران وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان مختلف مذاہب اور زبانوں کا حامل ملک ہے ، معاشرے میں مذہبی انتہا پسندی کی کوئی گنجائش نہیں، انصاف اور قانون کے مطابق کارروائی عمل میں لائی جائے گی، کسی سے ناانصافی نہیں ہوگی ،ریاست اقلیتوں کو نقصان پہنچانے والے عناصر کے ساتھ نہیں ہے، اکثریت کو اقلیت کا خیال رکھنا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ شدت پسند رویے کی حوصلہ شکنی کی جائے گی اور اسے قانون سے روکا اور کنٹرول کیا جائے گا، ہماری ہر سرگرمی کا پیسہ عوام دیتی ہے، ہم مالی ڈسپلن لائیں گے۔

اس موقع پر نگران وزیراعظم نے 9 مئی کو چیئرمین پی ٹی آئی کی گرفتاری کے بعد پیش آنے والے واقعات پر بھی مایوسی کا اظہار کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں